فوج علی اکبر علیہ السلام کی امتیازی کارکردگی

اخبار وتقارير

2016-08-30

1441 مشاہدہ

عراق کی حالیہ جنگ میں جاری مقامی رضاکار دستوں کے نائب کمانڈر ابو مہدی المہندس نے بتایا کہ فوج علی اکبر علیہ السلام جس کا تعلق حرم مطہر حضرت امام حسین علیہ السلام سے ہے نے جزیرہ خالدیہ جو کہ شمال عراق میں حال ہی میں داعش سے آزاد کروایا  گیا فوج کا اہم کردار رہا ہے۔

اس کے ساتھ ہی آئندہ داعش  سے موصل ، حویجہ اور دیگر شمالی علاقہ جات آزاد کروائے جائیں گے۔

فوج علی اکبر علیہ السلام کی کارکردگی  کے بارے میں بتاتے ہوئے ابو مہدی مہندس نے کہا کہ فوج نے جرف صخر ،صلاح الدین اورانبار کی آزادی  میں انتہائی اچھی  کارکردگی  رہی    اور انفرادی طور پر فوج نے "تلال مکحول" نامی  علاقوں کو قبضہ  میں لیا  ۔

اور اس کے ساتھ ہی فوج علی اکبر نے انسانی  ہمدردی کی بنیاد پر جنگ زدہ علاقوں سے آنے والے مہاجرین  کو پناہ کی فراہمی کے ساتھ ساتھ اشیائے خوردونوش مہیا کیا ۔

 

توصیف رضا

نئے مواضیع

اکثر شائع

شایدآپ کو بھی پسند آئے